امریکہ کا پاکستان کی جانب سے سکھ یاتریوں کیلئے کرتار پور راہداری کھولنے کا خیرمقدم


United States welcomes opening of Kartarpur Corridor

امریکہ نے پاکستان کی طرف سے کرتارپور راہداری کھولے جانے کا خیرمقدم کیا ہے جس کا مقصد بھارت کے سکھ یاتریوں کو ضلع نارووال میں گوردوارہ دربار صاحب کرتار پور میں داخل ہونے کے لئے سہولت فراہم کرنا ہے۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان مورگن اورٹیگس نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پر ایک ویڈیو میں راہداری کھولنے کو وسیع تر مذہبی آزادی کے فروغ کی جانب ایک قدم قرار دیا ہے۔

مورگن اورٹیگس نے کہا کہ امریکہ راہداری کھلنے کو ہمسائیوں کے باہمی مفاد کے لئے مل کر کام کرنے کے حوالے سے مثبت مثال تصور کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس اقدام سے سکھ یاتری باآسانی گوردوارہ کرتارپور صاحب جا سکیں گے جو پاکستانی حدود میں ان کا مقدس مقام ہے۔

ترجمان نے کہا کہ یہ شاندار منصوبہ ایک حساس بین الاقوامی سرحد کے ایک طرف تین ایکڑ رقبے پر محیط دور دراز علاقہ کو بدل کر رکھ دے گا۔

کوئی تبصرے نہیں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.