کراچی،بیٹی قتل،باپ کی مبینہ خودکشی


  
کراچی کے علاقے شادمان ٹاؤن میں کاشف نامی شہری نے مبینہ طور پربیوی اور دو بچوں کو تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد خودکشی کرلی۔ پولیس کا کہنا ہے چوتھی منزل پر واقع فلیٹ کے مالک کاشف نے عمارت کی چھت سے کود کرجان دے دی۔ فلیٹ کے اندر سے اس کی  آٹھ سالہ بیٹی زینب کی لاش ملی جبکہ اہلیہ پینتیس سالہ صوفیہ اور دس سال بیٹا شدید زخمی حالت میں ملے۔

عمارت کے مکینوں کے مطابق چوتھی منزل پر واقع فلیٹ کے مالک چالیس سال کےکاشف نے موبائل فون مانگا اور بتایا کہ اس کے بچے فلیٹ میں لاک ہوگئے ہیں جس کے تھوڑی ہی دیر بعد کاشف نے عمارت کی چھت سے کود کر خودکشی کرلی۔ واقعے سے چند منٹ پہلے اس نے رشتے داروں کو فون کرکے اطلاع دی تھی۔ رشتے داروں کو کہا کہ بچے اور بیوی کمرے میں لاک ہوگئے ہیں ، رشتے دار پہنچے تو کاشف اور اس کی بیٹی کو مردہ حالت میں اور بیوی اور بیٹے کو زخمی حالت میں پایا۔

پولیس حکام کا کہناہے واقعے میں کاشف خود ملوث ہے یا کوئی اور ابھی کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا اور زخمیوں کا بیان بھی اس حوالے سے اہمیت کا حامل ہے۔

کوئی تبصرے نہیں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.