دنیا کی با ثر ترین خاتون رعشے کی زد میں



  جرمن چانسلر اینگلا مرکل پرایک ماہ میں  کپکپی کا تیسرا حملہ ہوا۔  اینگلا مرکل برلن میں فن لینڈ کے وزیراعظم کے ساتھ تقریب میں موجود تھیں جب ان پر کپکپاہٹ طاری ہوگئی۔ جرمن چانسلر کے ہاتھوں  سمیت پورا جسم لرزتا رہا، اس دوران جب ان کی خیریت  دریافت کی گئی تو انہوں نے کہا کہ وہ ٹھیک ہیں۔

 ستائس جون کو بھی برلن میں ہی تقریب کے دوران اینگلا مرکل پر کپکپاہٹ طاری ہوگئی تھی جس کے بعد ملک کے سیاسی حلقوں میں ان کی صحت سے متعلق تشویش کی لہر دوڑ گئی۔جرمن سیاسی حلقوں کا کہناہے کہ چانسلر کسی عارضے میں مبتلا ہیں لیکن وہ عوام کے ساتھ اعتراف کرنا نہیں چاہتیں۔

 اس سے پہلے یوکرین کے صدر کی آمد پر ایک تقریب کے دوران وہ ایک منٹ تک کاپتی رہیں ۔جرمن چانسلر کی ترجمان اسٹیفنی کا کہناتھا کہ چانسلر بالکل صحت مند ہیں اور انہیں کوئی عارضہ نہیں اور نہ ہی وہ بیمار ہیں ۔


کوئی تبصرے نہیں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.