حکومت دہشتگردی کے مکمل خاتمہ تک کارروائی جاری رکھے گی، وزیراعظم


Federal Cabinet meets in Islamabad

وزیراعظم عمران خان نے وفاقی کابینہ اور قوم کو یقین دلایا ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف حکومت کی کارروائی جاری رہے گی اور جلد ہی دہشت گردی کا خاتمہ کر دیا جائے گا۔

یہ بات وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بارے میں صحافیوں کو بریفنگ دیتے ہوئے کہی۔ وفاقی کابینہ کا اجلاس وزیراعظم عمران خان کی صدارت میں اسلام آباد میں ہوا۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کے لئے تیزی سے کام کررہی ہے اور وہ وقت دور نہیں جب ملک سے دہشت گردی کا مکمل خاتمہ ہو جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بیرونی عناصر ملک میں دہشت گردی کے واقعات میں ملوث ہیں اور حکومت جلد ہی اس ڈھانچے کو مکمل طور پر تباہ کر دے گی۔

فواد چوہدری نے کہا کہ کابینہ نے اثاثے ظاہر کرنے کی سکیم پر مزید غور کا فیصلہ کیا اور اس سلسلے میں وزیراعظم نے کل ایک اجلاس طلب کیا ہے۔

فواد چوہدری نے صحافیوں کو بتایا کہ وزیراعظم عمران خان کل تاریخی ہاؤسنگ سکیم کا افتتاح کرینگے انہوں نے کہا کہ پہلے مرحلے میں ایک لاکھ 35 ہزار اپارٹمنٹ تعمیر کئے جائیں گے۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ آج کے بعد سرکاری محکموں میں گریڈ ایک سے پانچ تک کی نوکریاں قرعہ اندازی کی بنیادپر دی جائیں گی۔

انہوں نے کہا کہ فیڈرل پبلک سروس کمیشن کو بہتر بنایا جائے گا اور اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کو ٹیسٹنگ سروس کمپنیوں کی تنظیم نو کا کام سونپا گیا ہے۔

فواد چوہدری نے کہا کہ سٹیل ملز کی تنظیم نو کی جائے گی اور چھ سو کمپنیوں نے اس منصوبے میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کچھ عرصے کیلئے پاکستان سٹیل ملز کو سرکاری و نجی شراکت داری پر چلایا جائیگا۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ آڈیٹر جنرل آف پاکستان کے دفتر کی استعداد کار میں اضافہ کیا جائے گا اور ادارہ جاتی اصلاحات اور کفایت شعاری کے مشیر ڈاکٹر عشرت حسین کو دو ماہ میں اس سلسلے میں سفارشات پیش کرنے کیلئے کہا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ لوک ورثہ کو کرتارپور کے مقام پر ثقافتی اور میڈیا مراکز قائم کرنے کیلئے کہا گیا ہے ملک میں جاری احتساب کے بارے میں وزیر اطلاعات نے کہا کہ یہ عمل جاری رہے گا اور قانون اپنا راستہ خود بنائے گا۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ بحران جیسی اقتصادی صورت حال گزشتہ دو حکومتوں کی بدعنوانی کے باعث پیدا ہوئی ہے۔

فواد چوہدری نے کہا کہ کابینہ نے پاکستان میں مطلوب بیرون ملک رہائش پذیر پاکستانیوں خصوصاً یورپی ملکوں میں رہنے والوں کو ملک میں واپس لانے کیلئے پاکستان پینل کوڈ میں ترمیم کی بھی منظوری دی۔

انہوں نے کہا یہ اقدام الطاف حسین' اسحاق ڈار' حسین نواز اور حسن نواز جیسے افراد کو ملک میں واپس لانے کی کوششوں کا حصہ ہے۔

کوئی تبصرے نہیں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.