ریاست مدینہ کا یہ مطلب نہیں کہ مفت حج کرائے، حکومت


نئی حج پالیسی پر حزب اختلاف کی جماعتوں نے حکومت کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔ جمعہ کو اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے حکومت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے حج کو کمائی کا ذریعہ بنالیا ہے یہ پہلی حکومت ہے جس نے سب سے عازمین کے لیے حج مہنگا کردیا ہے۔

  پارلیمنٹ کے ایوان بالا  میں اپوزیشن رہنماوں نے نئی حج پالیسی پر بحث کرتے ہوئے  کہا غریب آدمی کے لیے حج کرنا ناممکن ہوگیا ہے یہ کیسی ریاست مدینہ ہے جس نے مدینہ اور مکہ تک سفر دشوار بنادیا ہے۔ جماعت اسلامی کے سینیٹر مشتاق احمد نے اظہار خیال کرتے ہوئے حج اخراجات میں اضافے کو عازمین پر ڈرون حملہ قرار دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ مہنگائی کی سونامی کی زد میں حج آگیا۔

  دوسری جانب حکومت نے دو ٹوک مؤقف اختیار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جس پر فرض ہے وہ قوم کے پیسے سے حج کیوں کرے؟ سبسڈی کے چار سے پانچ ارب روپے اسکولوں اور اسپتالوں پر لگائیں گے۔ وزیر مذہبی امور نور الحق قادری کا کہنا ہے کہ  ریاست مدینہ  کایہ مطلب نہیں کہ مفت حج کرائیں۔

 فواد چوہدری نے  سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا  کہ سبسڈی کامطلب یہ ہے کہ حکومت غریب لوگوں سےرقم لےکرحج کرائے۔ وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور علی محمد خان نے سینیٹ میں جواب دیتے ہوئے کہا کہ گزشتہ حکومت کی حج پالیسی الیکشن مہم تھی سابق حکومت نے انتخابات کی وجہ سے حج اخراجات میں اضافہ نہیں کیا، ستر فیصد اخراجات سعودی عرب میں ہوتے ہیں اس پر پاکستانی حکومت کا کوئی کنٹرول نہیں۔

1 تبصرہ:

  1. نئی حج پالیسی پر حزب اختلاف کی جماعتوں نے حکومت کو آڑے ہاتھوں لے لیا۔ جمعہ کو اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے حکومت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے حج کو کمائی کا ذریعہ بنالیا ہے یہ پہلی حکومت ہے جس نے سب سے عازمین کے لیے حج مہنگا کردیا ہے۔
    madinah

    جواب دیںحذف کریں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.