وزیراعظم کی نصاب میں اقبالیات،تاریخ ِاسلام کے مضامین شامل کرنے کی ہدایت

Imran Khan hints at inclusion of Islamic History, Iqbaliaat to curriculum

وزیراعظم عمران خان نے نصاب میں اقبالیات اورتاریخ اسلام کے مضامین شامل کرنے کی ہدایت کی ہے جس کا مقصد نوجوان نسل کو اسلام کی تاریخ، مسلمانوں کے سنہری دور اور علامہ اقبال کے افکار سے روشناس کرانا ہے۔

انہوں نے یہ بات جمعرات کو اسلام آباد میں نوجوان نسل کو اسلامی تاریخ اور علامہ اقبال کے فلسفے اور تصورات سے آگاہ کرانے سے متعلق ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی ۔

وزیراعظم نے کہاکہ اقبال کا فلسفہ انسان کو سوچنے کی آزادی دیتا ہے اور سوچ کے عمل کو مضبوط بناتا ہے ۔عمران خان نے کہاکہ ریاست مدینہ کے اصول آج بھی اسی طرح قابل عمل ہیں جیسے ظہور اسلام کی ابتدا میں تھے اوران سے مسلمانوں نے انتہائی قلیل عرصہ میں دنیا پر حکمرانی کی ۔

وزیراعظم نے کہاکہ ہم ریاست مدینہ کے اصولوں کی پیروی کرکے اپنی کھوئی ہوئی عظمت رفتہ حاصل کرسکتے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ مذہب اخلاقی اقدار کا درس دیتا ہے اور یہ سماجی واقتصادی انحطاط کے باعث زوال پذیر ہیں۔

وزیراعظم نے کہاکہ بدعنوانی اس اخلاقی زوال پذیری کی عکاس ہے ۔عمران خان نے کہاکہ عوام میں تاریخ اور حقائق کے بارے میں معلومات میں کمی سے گمراہ عناصر انہیں اپنے ذاتی مفادات کیلئے استعمال کرتے ہیں۔

وزیراعظم نے کہاکہ اسی طرح بعض عناصر اپنے ذاتی مقاصد کیلئے قبائلی علاقوں کے لوگوں کے مسائل اور بعض سیاستدان اپنے سیاسی مفادات کیلئے بھی اسلام کو استعمال کررہے ہیں۔

1 تبصرہ:

  1. وزیراعظم عمران خان نے نصاب میں اقبالیات اورتاریخ اسلام کے مضامین شامل کرنے کی ہدایت کی ہے جس کا مقصد نوجوان نسل کو اسلام کی تاریخ، مسلمانوں کے سنہری دور اور علامہ اقبال کے افکار سے روشناس کرانا ہے۔
    exam

    جواب دیںحذف کریں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.