چوری ہونے سے بچانے کے لئے حکومت سندھ کا نئی پرانی موٹرسائیکلوں میں ٹریکر لگوانے کا فیصلہ



Sindh government decides to install trackers in motorcycles for preventing them from being stolen

سندھ کے وزیر ٹرانسپورٹ سید اویس قادرشاہ نے کہا ہے کہ دار الحکومت کراچی سمیت سندھ بھر میں موٹر سائیکل میں ٹریکر لگانے اور موٹر وہیکل قانون  میں ترمیم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، جس کی سمری وزیراعلی سندھ کو ارسال کردی گئی ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر سے جاری کردہ بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا  کہ حکومت سندھ نے فیصلہ کیا ہے کہ صوبہ بھر کی نئی اور پرانی موٹر سائیکلوں میں ٹریکر لگوانے کے لئے ہدایت کی جائے گی،  نئی اور پرانی موٹرسائیکل میں ٹریکر لگانے کی سمری منظور ہونے کہ بعد سندھ بھر میں قانون لاگو ہوجائے گا جبکہ موٹر واہیکل میں بھی ترمیم کا فیصلہ اور بل اسمبلی سے پاس کروایا جائے گا۔

سید اویس قادر شاہ نے کہا ہے کہ موٹر سائیکلز میں ٹریکرز لگانے کہ لیے کمپنیز اور شوروم مالکان کو پابند کیا جائے گا،جس موٹر سائیکل میں ٹریکر نہیں ہوگا اس کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔   

حکومت سندھ نے ایسا فیصلہ سندھ بھر میں موٹر سائیکل چوری ہونے سے بچانے کے متعلق کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ موٹر سائیکل میں ٹریکر لگا ہوگا تو ہی محکمہ ایکسائز موٹر سائیکل کی نمبر پلیٹ دیکر رجسٹرڈ کرے گی۔   

صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ نے کہا کہ ٹریکر لگنے سے موٹر سائیکل چوری ہونے کہ بعد ٹارگٹ کلنگ اور دیگر کارروائیوں میں استعمال ہونے سے بچ جائیں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ کراچی میں تمام موٹرسائیکلز میں ٹریکر لگانے سے متعلق تمام اداروں کو پابند کیا جائے گا،موٹر سائیکلوں میں ٹریکر لگانے سے عوام کو ہی فائدہ ہوگا۔

کوئی تبصرے نہیں

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.